پی ٹی آئی کے کسی بھی رکن کو قومی اسمبلی ایوان میں داخل نہیں ہونے دیا جائیگا، سپیکر

سپیکر قومی اسمبلی راجہ پرویز اشرف کا پاکستان تحریک انصاف کے استعفوں سے متعلق عدالتی فیصلے پر موقف سامنے آگیا۔سپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ پی ٹی آئی ارکان پارلیمنٹ ہاﺅس کی بلڈنگ میں آ سکتے ہیں ، لاہور ہائیکورٹ کا فیصلہ ابھی تک موصول نہیں ہوا، فیصلہ موصول ہونے پر قانونی ٹیم سے مشاورت کے بعد فیصلہ کیا جائے گا، بطور سابق ممبران پارلیمنٹ کی بلڈنگ میں ارکان آ سکتے ہیں، کسی بھی رکن کو قومی اسمبلی ایوان میں داخل نہیں ہونے دیا جائے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سپیکر نے قومی اسمبلی سکیورٹی کو ہدایات جاری کر دیں، سپیکر نے سارجنٹ ایٹ آرمز کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی کے سابق ارکان اسمبلی ایوان میں نہ آنے پائیں، سپیکر نے کہا کہ پی ٹی آئی ارکان ایوان کے اندر داخل نہیں ہو سکتے جب تک معاملے پر وضاحت نہ ہو جائے، غیر ممبر ایوان میں ایم این ایز نشستوں پر بیٹھ سکتا ہے نہ گیلریز سے آگے جاسکتا ہے، کسی رکن نے بغیر اجازت جانے کی کوشش کی تو سارجنٹ ایٹ آرمز روکیں گے، اس حوالے سے حکمت عملی طے کر لی گئی۔

سپیکر راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ پی ٹی آئی مستعفی ارکان سے متعلق ہائیکورٹ کا فیصلہ موصول نہیں ہوا، لاہور ہائیکورٹ کا فیصلہ نہ ہمارے سامنے ہے نہ ہم نے اسے پڑھا، اس فیصلے کی کوئی تفصیلات ہمیں نہیں ملیں، جب تک ہائیکورٹ کا فیصلہ سامنے نہیں آتا اس معاملے پر کوئی پیشرفت نہیں ہو سکتی، سنا ہے لاہور ہائیکورٹ میں ہمیں بھی پارٹی بنایا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں