خیبرپختونخوا میںفورسز کی مختلف کارروائیوں میں 27 دہشت گرد ہلاک،جھڑپ میں 7 جوان شہید ہوگئے

راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک)خیبرپختونخوا میں سکیورٹی فورسز کی مختلف کارروائیوں میں27 دہشت گرد ہلاک ہوگئے جبکہ جھڑپ میں7 جوان جام شہادت نوش کرگئے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر کے مطابق سیکیورٹی فورسز کے خیبر پختونخوا میں 3 الگ الگ آپریشنز میں 27 دہشت گرد انجام کو پہنچ گئے۔ترجمان پاک فوج کے مطابق 26 مئی کو پشاور کے علاقے حسن خیل میں آپریشن کے دوران 6 دہشت گرد مارے گئے، سیکیورٹی فورسز نے 6 دہشت گردوں کو گرفتار اور متعدد ٹھکانے بھی تباہ کئے۔

ضلع ٹانک کے ایک اور آپریشن میں 10 دہشت گردوں کو انجام تک پہنچایا گیا۔ سیکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں میں تیسری جھڑپ ضلع خیبر کے علاقے باغ میں ہوئی، سیکیورٹی فورسز سے مقابلے میں 7 دہشت گرد ہلاک جبکہ 2 زخمی ہوئے۔ترجمان پاک فوج کے مطابق فائرنگ کے شدید تبادلے کے دوران بہادری سے لڑتے ہوئے 7 بہادر سپاہی بھی وطن پر قربان ہوئے۔

شہید ہونے والوں میں ضلع کہوٹہ کے رہائشی 32 سالہ نائیک اشفاق بٹ، ضلع پونچھ کے رہائشی 30 سالہ لانس نائیک دانش افکار شامل ہیں۔ شہید ہونے والے سپاہی تیمور ملک کی عمر 32 سال اور رہائش ضلع لیہ تھی۔شہید ہونے والے 22 سالہ سپاہی نادر صغیر کا تعلق ضلع باغ سے ہے، ضلع خوشاب کے 23 سالہ سپاہی محمد یاسین نے بہادری سے لڑتے ہوئے شہادت کو گلے لگایا۔ترجمان پاک فوج کے مطابق مارے گئے دہشت گردوں سے بھاری اسلحہ، گولہ بارود اور دھماکہ خیز مواد بھی برآمد ہوا، دہشت گرد سیکورٹی فورسز اور شہریوں کے خلاف دہشت گرد حملوں میں ملوث تھے۔

آئی ایس پی ا7ر کے مطابق علاقے میں کسی بھی دہشت گرد کے خاتمے کے لیے سرچ آپریشن جاری رہے گا، سیکیورٹی فورسز دہشت گردی کی لعنت ختم کرنے کےلیے پرعزم ہیں، بہادر سپاہیوں کی ایسی قربانیاں ہمارے عزم کو مزید مضبوط کرتی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں