قومی اسمبلی کوآپریٹو ہائوسنگ سوسائٹی انتظامیہ کی ملی بھگت، کروڑوں کے پلاٹس میں خرد برد،شہری ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کے پاس پہنچ گیا

ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات نے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈ کوارٹرز کو تحقیقات کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیدیا

اسلام آباد (سی این پی)قومی اسمبلی کوآپریٹو ہائوسنگ سوسائٹی انتظامیہ کی مبینہ ملی بھگت کروڑوں روپے مالیت کے پلاٹوں کی خرد برد کرنے کا انکشاف ہوا ہے شہری آٹھ سال بعد ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات کے پاس پہنچ گیا ڈی سی نے ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈ کوارٹر کو تحقیقات کر کے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کر دی۔ ذرائع کے مطابق نیشنل اسمبلی کوآپریٹو ہائوسنگ سوسائٹی اسلام آباد کے عہدیداروں کے خلاف شہری شاہد بشیر نے ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کو ایک درخواست دی جس میں موقف اختیار کیا کہ مذکورہ سوسائٹی کو بروقت اقساط جمع کروائی رقم ادا کر دی گئی یہ پلاٹ اس نے 2014 میں لیا تھا مگر انتظامیہ اس کا پلاٹ دینے سے انکاری ہو گئی اور دفتر کے چکر لگوانے شروع کر دئیے اس کا کہنا تھا کہ اس نے اپنی جمع پونجی پلاٹ حاصل کرنے کےلئے دی لیکن اب انتظامیہ انکاری ہو گئی ہے اس کا کہنا تھا کہ نیشنل اسمبلی کوآپریٹو ہائوسنگ سوسائٹی انتظامیہ میرا پلاٹ ہی نہیں بلکہ بہت سارے شہری ان سے متاثر ہوئے ہیں جن کو ابھی تک پلاٹ نہیں ملے اور وہ ان کے دفتر کے چکر لگا چکے ہیں جس پر ڈپٹی کمشنر اسلام آباد نے حمزہ شفقات سے فوری ایکشن لیتے ہوئے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈ کوارٹر کو تحقیقات کرکے رپورٹ کرنے کی ہدایت کی ہے جس پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر عاصمہ ثنا اللہ نے ہائوسنگ سوسائٹی انتظامیہ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے فوری طور پر انتظامیہ کو طلب کیا ہے۔ یاد رہے ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈ کوارٹر کو تحقیقات کر کے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کر دی

اپنا تبصرہ بھیجیں