پی ایس ایل7 کا پہلا سپر اوور مقابلہ، لاہور قلندرز کو شکست، پشاور زلمی کی جیت

پاکستان سپر لیگ کے ساتویں ایڈیشن کے میچ میں شاہین شاہ آفریدی کی عمدہ بیٹنگ کے سبب پشاور زلمی اور لاہور قلندرز کے درمیان میچ ٹائی ہو گیا اور میچ کا فیصلہ سپر اوور میں ہو گا۔

لاہور کے قذافی اسٹیڈیم میں کھیلے جا رہے پاکستان سپر لیگ کے ساتویں ایڈیشن کے آخری لیگ میچ میں پشاور زلمی نے ٹاس جیت کر لاہور قلندرز کو باؤلنگ کی دعوت دی۔

زلمی نے اننگز کا آغاز کیا تو گزشتہ میچ کے ہیرو محمد حارث صرف چھ رنز بنا کر چلتے بنے۔

ابھی زلمی اس نقصان سے سنبھلے بھی نہ تھے کہ فواد احمد نے کامران اکمل کی وکٹیں بکھیر کر اپنی ٹیم کو تیسری کامیابی دلا دی۔

51رنز پر تین وکٹیں گرنے کے بعد حیدر علی کا ساتھ دینے شعیب ملک آئے اور دونوں نے چوتھی وکٹ کے لیے 60رنز کی رفاقت قائم کی، شعیب ملک 32رنز بنانے کے بعد فواد کی دوسری وکٹ بن گئے۔

حیدر علی سے بھی ساتھی کھلاڑی کی جدائی برداشت نہ ہو سکی اور مجموعی اسکور میں دو رنز کے اضافے سے ان کی بھی 25 رنز کی اننگز اختتام کو پہنچی۔

اختتامی اوورز میں زلمی جارحانہ کھیل پیش کرنے میں ناکام رہے اور مقررہ اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 158 رنز بنا سکے۔

لاہور قلندرز کی جانب سے آسٹریلیا کے فواد احمد نے دو وکٹیں حاصل کیں جبکہ شاہین آفریدی، حارث رؤف، محمد حفیظ اور ڈیوڈ ویزے نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔

ہدف کے تعاقب میں قلندرز کو پہلی ہی گیند پر دھچکا لگا اور شعیب ملک کی گیند پر فخر زمان بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے۔

دوسری وکٹ کے لیے فل سالٹ نے کامران غلام کے ساتھ 37 رنز کی ساجھے داری قائم کی لیکن سالٹ 14 رنز بنا کر بولڈ ہو گئے۔

کامران غلام 25 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہوئے لیکن قلندرز کی ہدف کے تعاقب کی کوششوں کو اس وقت نقصان پہنچا جب ہیری بروک صرف دو رنز بنا کر پویلین جا بیٹھے۔

چار وکٹیں گرنے کے بعد حفیظ کا ساتھ دینے سہیل اختر آئے اور دونوں نے 39رنز جوڑ کر مجموعہ 88 تک پہنچا دیا، قلندرز کے سابق کپتان 19 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جبکہ ڈیوڈ ویزے کی اننگز صرف ایک رن پر تمام ہوئی۔

اس مرحلے پر تمام تر امیدیں محمد حفیظ سے وابستہ تھیں لیکن 49 رنز کی اننگز کھیلنے کے بعد ہو آؤٹ ہوئے تو قلندرز نے 129 رنز بنائے تھے۔

میچ کے آخری اوور میں میزبان ٹیم کو فتح کے لیے 24 رنز درکار تھے لیکن شاہین شاہ آفریدی نے اپنی جارحانہ بیٹنگ سے میچ کا نقشہ بدل دیا۔

قلندرز کے کپتان نے آخری اوور میں 23 رنز بٹور کر میچ کو ٹائی کردیا۔

شاہین شاہ آفریدی نے 20 گیندوں پر دو چوکوں اور چار چھکوں کی مدد سے 39رنز بنائے۔

سپر اوور میں لاہور قلندرز کے بلے باز اسکور کرنے میں ناکام رہے اور چھ گیندوں پر صرف 5رنز بنا سکے اور پشاور زلمی کے شعیب ملک نے ابتدائی دو گیندوں پر چوکے لگا کر اپنی ٹیم کو فتح سے ہمکنار کرا دیا۔

اس سے قبل پشاور زلمی نے میچ کے لیے ٹیم میں چھ تبدیلیاں کیں اور کامران اکمل، عماد بٹ، خالد عثمان، محمد عمر، ارشد اقبال اور حیدر علی کو فائنل الیون کا حصہ بنایا ہے جبکہ قلندرز کی ٹیم میں بھی ایک تبدیلی کی گئی ہے۔

پشاور زلمی اور لاہور قلندرز کی ٹیمیں ایونٹ کے پلے آف مرحلے کے لیے کوالیفائی کر چکی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں