احسن اقبال نے توشہ خانہ سے لئے گئے تحائف کی رضاکارانہ طور پر پوری قیمت ادا کردی

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی احسن اقبال نے توشہ خانہ سے لیے گئے تحائف کی رضاکارانہ طور  پر  پوری قیمت ادا کر دی۔احسن اقبال نے 19 لاکھ 19 ہزار روپے حکومتی خزانے میں جمع کرا دیے اور  مکمل ادائیگی کے بعد سیکرٹری کابینہ ڈویژن کو خط لکھا۔

خط کے متن کے مطابق 2018 میں حکومتی رولز کے مطابق تحائف قانونی طور پر حاصل کیے، توشہ خانہ سے 15 لاکھ 50 ہزار مالیت کی مردانہ رولیکس گھڑی حاصل کی تھی، توشہ خانہ سے  لی گئی گھڑی کی قانون کے مطابق 3 لاکھ 4 ہزار روپے ادائیگی کی گئی، گھڑی کے باقی کے 12 لاکھ 46 ہزار روپے خزانے میں جمع کرا دیے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایک  لاکھ 39 ہزار مالیت کا قالین توشہ خانہ سے حاصل کیا تھا، قالین کی قیمت قانون کے مطابق 20 ہزار روپے ادا کی گئی تھی۔

خط کے متن کے مطابق قالین کی بقایا رقم ایک لاکھ 19 ہزار روپے سرکاری خزانےمیں جمع کرادی ہے۔خط میں کہا گیا ہے کہ میں نے تحائف مروجہ طریقہ کار کے مطابق حاصل کیے، قانون کے مطابق اضافی ادائیگی کرنے کی ضرورت نہیں تھی لیکن رضاکارانہ ادائیگی کررہا ہوں تاکہ ناجائز فائدہ اٹھانے کے الزام کا خاتمہ ہو۔

اپنا تبصرہ بھیجیں